Wed. Oct 20th, 2021

“بند کروں گا تحریک”

گلگت بلتستان میں آج کل ایک نئی تحریک نمودار ہوئی ہے.

 مبصرین اور “تجزیہ کاروں” کے نزدیک اس تحریک کو

 “بند کروں گا تحریک”

کا نام دیا جا سکتاہے.

الف نے کہا …. “ہم شاہراہ قراقرم کا دیامراور کوہستان والا حصہ  بند کریں گے.”

ب نے کہا….. “ہم گلگت ایر پورٹ  بند کریں گے.”

ج نے کہا …..”ہم شاہراہ قراقرم کا چین کے ساتھ جڑا حصہ بند کریں گے.”

د نے کہا …. “ہم گلگت – سکردو روڑ بند کریں گے.”

بھوک نے سرگوشی کی …. “میں تمہاری خوشیاں بند کروں گا.”

امن اور سکون نے دہائی دی ….. “میں اس علاقے میں آنا بند کروں گا.”

دماغ مسکرایا …. “میں سوچنا بند کروں گا”

دل نے کہا …… “میں دھرکٹنا بند کروں گا”

موت نے بھیانک قہقہ لگایا ……. “میں تمہاری زندگی کی  کتاب بند کروں  گا.”

عام آدمی نے سوچا   …. “میں آنکھیں بند کردوں گا.”

Source: www.noorpamiri.com

2 thoughts on ““بند کروں گا تحریک”

Comments are closed.

Instagram did not return a 200.